206

پاکستان پوری دنیا پر بازی لے گیا، کرونا وائرس کی تشخیص کرنیوالی سستی ترین کِٹ بنا کر طبی میدان میں کارنامہ سرانجام دیدیا

اسلام آباد(نیوزڈیسک)نسٹ کے عطا الرحمن سکول آف اپلائیڈ بائیوسینس کے سائنسدانوں نے ووہان انسٹی ٹیوٹ آف وائرولوجی چین اور DZIF جرمنی،کولمبیا یونیورسٹی یو ایس اے اور آرمڈ فورسز انسٹی ٹیوٹ آف پیتھولوجی راولپنڈی کے اشتراک سے ناول کرونا وائرس کی کھوج کے لئے کامیابی کے ساتھ مالیکیولر ٹیسٹنگ کٹ تیار کرلی ہے۔COVID-19 کی تشخیص کے لئے نئی کٹس موجودہ ٹیسٹنگ کٹس کی موجودہ قیمت کی ایک چوتھائی قیمت پر دستیاب ہوں گے۔ نسٹ یونیورسٹی کے مطابق کٹس میں وائرس کی تشخیص کیلئے سائبر گرین اور تقمان کے روایتی اور حقیقی وقت پی سی آر پر مبنی دونوں طریقے شامل ہیں۔لیبارٹری کنٹرول اور مریض کے نمونے پر ٹیسٹنگ کٹس کا موثر انداز میں تجربہ کیا گیا ہے۔کٹس تیار کرنے والی ٹیم میں نسٹ سے تعلق رکھنے والی ایسوسی ایٹ پروفیسر ڈاکٹر انیلہ جاوید اور اسسٹنٹ پروفیسر ڈاکٹر علی زوہیب شامل ہیں ، جو وبائی امراض کی تشخیص کے لئے کام کررہے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں